اِس وظیفہ کی ہر بندے کو ضرورت ہے۔ یہ عمل پہلی بار ہی آپ کو حیران کر دے گا۔ اگر کبھی آپ کے ساتھ ایسا ہو تو یہ عمل لازمی کر لینا۔

ہماری زندگی میں کئی دفعہ ایسے کام ہو تے ہیں جو بہت زیادہ بگڑ جا تے ہیں اور پھر ہم پوری کوشش کر لیتے ہیں لیکن وہ کام سیدھے نہیں ہو تے تو میرے بھائیو جب بھی آپ کی زندگی میں کوئی مشکل کام آ جا ئے جو بگڑ چکا ہو یا کسی پر قرض چڑھ چکا ہو کسی کے گھر میں بیماری آ گئی ہو یا اور زندگی میں بہت سے ایسے کام ہو تے ہیں تو یہ جو عمل ہے یہ جو وظیفہ آپ کو میں بتانے لگا ہوں یہ ہر کام کی کنجی ہے یعنی کہ اس وظیفے سے مشکل سے مشکل کام بھی حل ہو جا تا ہے ۔

جو بھی آپ کی ضرورت ہے جو بھی آپ کا مسئلہ ہے میرے اللہ اپنے فضل و کرم سے انشاء اللہ حل فر ما دیتے ہیں یہ مجرب عمل ہے بہت ہی پاورفل عمل ہے اور جس جس نے بھی اس عمل کو کیا ہے اللہ نے اسے نواز دیا ہے۔ اگر ایک بندے کے اوپر قرض ہے اور وہ تمام کوششیں کر چکا ہے اس کا قرض نہیں اتر رہا قرض سے جان نہیں چھوٹ رہی تو اس عمل کو کر لیں انشاء اللہ کچھ ہی دنوں میں دیکھنا کہ سارے کا سارا قرض اتر جا ئے گا اسی طرح کسی کے ہاں بے روزگاری کا بہت زیادہ مسئلہ ہے کسی کے ہاں پیسہ آ تا ہے ٹکتا نہیں ہے

اس عمل کے کرنے سے جتنی بھی حالات خراب ہوں گے یا خراب ہو رہے ہوں گے تو وہ اس عمل کو کر لے اس عمل کو اگنور مت کر یں انشاء اللہ اس زندگی کی دوڑ میں اس وظیفے کی بر کت سے وہ کامیاب ہو جا ئے گا ۔

اس عمل سے رزق ہی رزق آ نا شروع ہو جا ئے گا آپ کی ہر دعا قبول ہو جا ئے گی بعض اوقات انسان کی دعا قبول نہیں ہو تی تو آپ کو ایک بچی کی مثال دیتے ہیں کہ کس طرح وہ رو رو کر اپنی بات منوا لیتا ہے اپنی والدہ سے اسی طرح آپ بھی انسان کو بھی چاہیے کہ اللہ سے گڑ گڑا کر مانگے ۔

اپنے بندوں سے اللہ پاک ستر ماؤں سے زیادہ پیار کر تا ہے تو یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ وہ اپنے بندے کی دعا قبول نہ کر ے آج کا یہ وظیفہ آ پ نے اس وظیفے کو کر لینا ہے اللہ پاک کے حکم سے آپ کے گھر میں رزق ہی رزق آ جا ئے گا دولت ہی دولت ہو گی اور رزق اور دولت کے ھوالے سے جتنی بھی پریشانیاں ہوں گی میرا اللہ ان کو دور فر ما دے گا۔

اللہ ُ لا الہ الا ھو الحی القیوم یہ وظیفہ جلالی اور جمالی دونوں قسم کے الفاظ پر مبنی ہے اکثر عاملین اور کاملین نے اسے اسمِ اعظم قرار دیا ہے۔ یہ ایک ایسا وظیفہ ہے کہ اس کے پڑھنے سے ہر نعمت حاصل ہو جا تی ہے۔ ہر بگڑا ہوا کام سیدھا ہو جا تا ہے۔