صرف تین مرتبہ سورت قریش اسطرح پڑھیں

سورت القریش” ہماری زندگی کے مالی اور گھریلو الجھنوں کا بہترین عمل ہے آپ عمل کریں۔ اور فائدہ اٹھائیں۔ یہ سب آزمودہ ہیں۔ رخصتی میں نصیحتوں کے ساتھ “سورت القر یش” کا تحفہ دینا نہ بھولیں۔ پھر آپ کی بیٹی ہمیشہ خوش اور آباد رہے گی۔ سسرال اور شوہر بھی راضی رہیں گے۔ بیٹیوں کو نئے گھر کے طور طریقے سمجھنے میں وقت لگتا ہے۔اسی وجہ سے بہت سے کام پسند نہیں آتے ۔

اس کا بہترین حل یہ ہے کہ کام توجہ سے کریں۔ بڑوں سے پوچھ لیں۔ اگر پھر بھی لگے کہ کام صیحح نہیں ہوا۔ باتیں سننی پڑیں گی۔ تو “سورت القر یش” کا ورد کریں۔ ایک دو یاتین بار پڑھیں۔ یہ تو وقت سے پہلے پڑھنے کاکمال تھا۔ بات بڑھے گی نہیں ۔ تو جھگڑے کا سوال ہی نہیں اٹھتا۔ اگر پڑھنا بھول جائیں اور غلطی ہوجائے تو اکیس بار پڑھ کر باتیں سنانے والے کا تصور کرکے پھونک دیں۔

آپ یقیناً بچ جائیں گے۔ صلح کروانے کے لیے بھی یہ عمل کمال کا ہے۔ اگر دو بندوں میں صلح کروانی ہو۔ یا دوسرے شہر میں ہو۔ آپ گھر بیٹھے ہی اکیس مرتبہ “سورت القر یش” پڑھ کر دونوں کا تصور کرکے پھونک دیں۔ اگر ان بن زیادہ ہو تو تین دن کام بن جائے گا۔ صلح ہوجائے گی۔ اگر آپ اپنے لیے کرنا چاہیں تو دوسرے حریف پر اکیس بار “سورت القر یش”پڑھ کردم کریں ۔اس کو تصور کرکے پھونکیں۔ “سورت القر یش” انا کے مسئلوں بنانے والوں کے لیے بہترین تحفہ ہے۔

کیونکہ بعض لوگ صلح تو کرنا چاہتے ہیں۔ مگر پہل نہیں کرنا چاہتے تو وہ بھی اکیس مرتبہ پڑھ کر جس سے صلح چاہتے ہیں اس کا تصور کرکے پھونک دیں۔ آپ کی پہل بھی ہوجائے گی۔ اور کسی کو پتہ بھی نہیں چلے گا۔ بچوں کی ضد کے لیے ایک سے تین بار “سورت القر یش”پڑھیں۔ بچہ فوراً ضد چھوڑ دے گا۔

اور آپ کی بات مان لے گا۔ اگر آپ نےکسی کو کچھ غلط کہہ دیا ہے اور آپ چاہتے ہیں۔ کہ یہ بات دوسرے تک نہ پہنچے۔ تو سننے والے پر ایک بار پڑھ کر پھونک دیں۔یا پھر مقصد ذہن میں رکھ کر پڑھ لیں۔ وہ کسی سے کچھ نہیں کہے گا۔ جھگڑا نہیں بڑھے گی۔ لیکن عادت نہ بنائیں ۔ ناحق خدا بھی آ پ کا ساتھ نہ دے گا۔ بچوں کے جھگڑے : اگر بچے آپس میں جھگڑا کررہے ہوں۔

اور آپ کچن میں ہوں یا دوسرے کمرے میں ہوں۔ ان کی آواز سنیں تو وہاں جائے بغیر ہی ایک دو یا تین بار “سورت القر یش”کاورد کریں گی۔ تو جھگڑا ختم ہوجائے گا۔ بڑبڑ کرنے والوں کے لیے کبھی بچوں کویا بڑوں کو کوئی بات بری لگ جاتی ہے۔

یا کسی کو مارو تو وہ گڑ گڑا کرتا رہتاہے یا مسلسل کسی کی برائی کررہا ہو۔یا تلخ گفتگوکررہا ہو۔ یا دو لوگ آپس میں بحث کررہے ہوں۔ تو بار بار ان کو چپ کہنے کے بجائے صرف ایک دو یا تین بار “سورت القر یش”پڑھیں۔وہ بندہ فوراً چپ ہوجائے گا۔

کچھ ناگوار گزرے تو بھی آپ ایک دو یا تین مرتبہ “سورت القر یش” پڑھیں۔ جیسے کوئی باہر پٹاخے پھوڑرہا ہو۔ واش بیسن میں اپنی ناک کی تفصیلی صفائی کررہا ہو۔ یا کوئی شور مچارہا ہو۔ اور منع کرنے پر باز نہ آئے تویہی آزمائیں ۔ بغیر کچھ کہے اپنی بات منوائیں ۔