تیراں رجب حضرت علی  کی ولا دت کے دن کا وظیفہ ! اس دن یہ عمل کرنے سےآپ کی تمام پریشانیاں ، مصیبتیں ہمیشہ کے لیے ختم ہو جائیں گی۔ انشاء اللہ !

اے ایمان والو! نماز قائم کرو! بے شک نماز بے حیائی اوربرے کاموں سے روکتی ہے ۔ آج آپ کی خدمت میں ایک ایسا وظیفہ لے کر آیا ہوں کہ جس کی مدد سےآ پ اپنی ساری مشکلات سے اپنی ساری مصیبتوں سے چھٹکارا حاصل کر سکتے ہیں اور اس کے ساتھ ساتھ اپنی زندگیوں میں سکون بھی پیدا کر سکتے ہیں

جیسا کہ ہر انسان ہی یہی چاہتا ہے کہ اس کی زندگی سکون سے بھر پور ہو اس کی زندگی میں کسی بھی قسم کا کوئی بھی غم نہ ہو کوئی بھی پریشانی نہ ہو اور اس کے علاوہ کوئی بھی ایسی تکلیف نہ ہو کہ جس تکلیف کی وجہ سے اس کی زندگی بے رونق ہو جائے اللہ ہمارے زندگیوں میں بہاروں کا آنا سلامت رکھے آمین۔

تیراں رجب کا ایک ایسا وظیفہ ہے حضرت علی کی ولاد ت کا دن ہے اس کا بہت ہی خاص وظیفہ لے کر آیا ہوں کہ جس کی مدد سے ہر قسم کی مشکلات سے چھٹکارا حاصل کر سکتے ہیں حضرت علی کو کئی ناموں سے پکا را جا تا ہےجیسا کہ حضرت علی کو مولا مشکل کشا کے نام سے بھی پکا را جا تا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ ان کے شیرِ خدا بھی کہا جاتا ہے مو لا علی کے نام سے بھی پکا را جا تا ہے۔

حضرت علی کی ولادت کے دن یہ جو وظیفہ آپ کی خدمت میں پیش کر رہا ہوں اس سے آپ کی تمام مشکلات دور ہو جائیں گے غم بھی دور ہو جائیں گے کیونکہ حضرت علی نے حضور پاک کا بہت ساتھ دیا ہے مشکلوں میں اس لیے اس نیت سے آپ وظیفہ کریں کہ حضرت علی کی ولادت کے دن کے صدقے ہمارے تمام پریشانیاں دور کر دیں تو انشاء اللہ یہ وظیفہ آپ کا رائیگاں نہیں جا ئے گا آپ کی ہر دعا قبول ہو جائے گی آپ کی محنت ضرور رنگ لائے گی اب یہ وظیفہ کسی بھی پریشانی کے لیے کر سکتے ہیں اولاد کے لیے کر سکتے ہیں۔

جو جوڑے اولاد سے محروم ہیں ابھی تک وہ اس کو اولاد کی نیت سے کریں انشاء اللہ اللہ تعالی حضرت علی کے صدقے ضرور اولاد عطا کرے گا جو ماں باپ اپنی بیٹیوں کے رشتوں سے پریشان ہیں وہ اچھے رشتوں کے لیے کریں جن بھائیوں کی جاب نہیں لگ رہی وہ یہ وظیفہ یہ مبارک وظیفہ اپنی جاب لگنے کے لیے کر یں اور اس کے ساتھ ساتھ بہت سی مشکلات اس وظیفے کی مدد سے حل کر سکتے ہیں۔

انشاء للہ بہت جلد تمام پریشانیاں ختم ہو جائیں گی۔ آ پ نے آیتِ کریمہ ایک سو اکیس مرتبہ پڑ ھنی ہے اور پڑھنی کے بعد دعا کر نی ہے کہ اے اللہ حضرت علی کی ولادت کے دن کے صدقے میری یہ دعا قبول و منظور فر ما ۔