جو بات منہ سے نکالیں پوری ہوجاتی ہے اللہ سے جو مانگیں مل جاتا ہے۔

اس تحریر میں آپ کے لئے ایک بہت ہی طاقتور قرآنی سورت کا وظیفہ شیئر کیاجارہا ہے جس سے ہر مشکل کا آسان راستہ مل جاتا ہے جن کے بچوں کی شادیاں رک جائیں یا کاروبار ٹھپ ہوجائے یا امتحان میں کامیابی کا امکان کم ہو یا مشکل سفر پر نکلنا ہو کسی سے قرض واپس لینا ہو کوئی سرکاری کام پھنس جائے گویا کسی بھی مشکل میں یہ ایک بہت طاقتور اورقرآنی سورت کا وظیفہ ہے

اس مختصر سورت کی فضیلت کے بارے میں بخاری و مسلم کی کتب میں جو حدیث موجود ہے اس سے بھی اس تحریر میں آگاہ کیاجائے گا کہ نبی کریم ﷺ نے اس سورت مبارکہ کے بارے میں کیا کیا ارشاد فرمایا ہے احادیث میں بھی اس سورت کے بہت خواص ذکر ہوئے ہیں

جیسا کہ خطرات سے محفوظ ہونا خوف کا برطرف ہونا ظالم حاکم کے شر سے محفوظ رہنا اور اس سورت کو پڑھنے سے میاں بیوی میں محبت بھی پیداہوتی ہے اور اگر کوئی اچھی ملازمت حاصل کرنا چاہتا ہو تو اس کے لئے بھی آج کا یہ قرآنی سورت کا وظیفہ کمال کا درجہ رکھتا ہے ۔

حالات کی پریشانی سے انسان کا ایمان بھی ڈولنے لگتا ہے وہ جس بات میں اپنی ناکامی دیکھ رہا ہوتا ہے اللہ کے ہاں اس کی حکمت کوئی اور ہوسکتی ہے اس لئے انسان کو اپنے ہر عمل میں اللہ سے مدد مانگنی چاہئے تا کہ دنیا اس کے لئے آسان ہو اور ایمان کی دولت نصیب ہو حالات کی تنگی اور مختلف طرح کے مقدمات اور مالی مسائل میں آپ نے دیکھا ہو گا کہ ہم کتنے ناامید ہوجاتے ہیں

ایسے لوگ اگر یہ سورت یعنی سورہ فتح کی تلاوت کیا کریں تو یقینی طورپران کے ہر جائز عمل میں اللہ کی رضا اور فتح شامل ہوگی سورہ فتح کی تلاوت کا مکمل طریقہ اور اوقات بھی بتائیے جارہے ہیں۔جن کو یہ سورہ فتح کا وظیفہ بتایا وہ کہنے لگے کہ ہم گاؤں میں رہتے تھے میرے تایا کی اور ان کے دوستوں کی کسی سے لڑائی ہوئی اور سارا گاؤں ہمارا مخالف ہوگیا ہمیں گھر چھوڑ کر لاہور شفٹ ہونا پڑا ہمارے والد بہت ہی شریف انسان تھے لیکن لڑائی اتنی بڑھ گئی تھی کہ یہ بات پولیس تک پہنچ گئی۔

پولیس نے میرے والد سے کہا کہ جب تک آپ کے بھائی اور ان کے دوست نہیں آجاتے ہم آپ کو تھانے میں ہی رکھیں گے میرے ابو کو پولیس والے تھانے لے گئے میرے تایا ابو جلدی سے نئی گاڑی کروا کر لائے اور ہمیں کہا کہ جلدی سے ہم لاہور چلیں جب ہم راستے میں تھے تو میری والدہ نہایت پریشان تھی میری والدہ نے اپنے ساتھ قرآن پاک رکھ لیا اور سورت فتح پڑھنا شروع کردی

انہوں نے لاہور پہنچنے تک یہ وظیفہ مکمل کرلیا تھا لہٰذاگاؤں ہماری ایک گاڑی رینٹ پر چلتی تھی جو اس گاڑی کے ڈرائیور تھے وہ اتفاقا تھانے کے سامنے سے گزرے تو انہوں نے تھانے کے اندر جھانک کر دیکھا تو انہیں میرے والد صاحب صحن میں بیٹھے نظر آئے انہوں نے فورا بریک لگائی اور میرے والد کو اشارہ کیا کہ جلدی سے آجائیں میرے والد آرام سے چلتے ہوئے تھانے سے باہر آگئے کسی پولیس والے نے نہ ان کو روکا نہ آواز دے کر پوچھا کہ کہاں جارہے ہوں حالانکہ اس وقت تمام عملہ تھانے میں موجود تھا۔

یہ سورہ فتح کے عمل کی وجہ سے غیبی مد د آئی اور میرے والد آکر گاڑی میں بیٹھ گئے اور اس ڈرائیور نے گاڑی فورا لاری اڈاہ کی طرف دوڑائی اور میرے والد کو لاہور روانہ کردیا تھوڑی ہی دیرمیں میرے والدنے میری دادی کو فون کیا کہ میں وہاں سے نکل کر لاہور آرہا ہوں سورہ فتح کا اللہ نے کتنا بڑا کرشمہ دکھایا کہ میرے والد صحیح سلامت گھر پہنچ گئے۔

عمل یہ ہے کہ 3 دن تک اکتالیس مرتبہ پڑھیں یہ سورت پہلے ہی دن اپنا کرشمہ دکھاتی ہے جن کے بچوں کی شادیاں رک جائیں یا کاروبار ٹھپ ہوجائیں یا امتحان میں کامیابی کا امکان کم ہو مشکل سفر پر نکلنا ہو کسی سے قرض واپس لینا ہو یا کوئی سرکاری کام پھنس جائے گویا کسی بھی مشکل میں یہ ایک بہت ہی طاقت ور قرآنی سورت کا وظیفہ ہے ۔اللہ ہم سب کا حامی وناصر ہو۔آمین