ج ن ا ب ت کی حالت میں سحری کھا نا اور روزہ رکھنا کیسا ہے؟

وقت کی قلت کے سبب اگر فوری غسل کرنا ممکن نہ ہو تو حالتِ جنابت میں سحری کرنا جائز ہے۔ حضرت ابوبکر بن عبد الرحمن رضی اللہ عنہما سے روایت ہے کہ میں اپنے والد ماجد کے ساتھ گیا۔ یہاں تک کہ ہم حضرت عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا کی خدمت میں حاضر ہوئے۔ انہوں نے فرمایا: میں گواہی دیتی ہوں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کو اگر احتلام سے (ہی) نہیں، جماع سے جنابت کی حالت میں صبح ہوتی تو روزہ رکھ لیا کرتے۔

پھر ہم حضرت ام سلمہ رضی اللہ عنہا کی خدمت میں حاضر ہوئے تو اُنہوں نے بھی اسی طرح فرمایا۔‘‘لہٰذا مجبوری کی وجہ سے حالتِ جنابت میں سحری کر سکتے ہیںاگر کسی شخص پر غسل واجب ہو اور وہ صبح صاد ق سے پہلے غسل نہ کرسکا اور سحری کرکے روزہ رکھ لیا تو اس کا روزہ درست ہے۔

ناپاک ہونے کی وجہ سے روزہ پر کوئی فرق نہیں پڑے گا، البتہ جلد از جلد غسل کرلینا چاہیے، غسل میں اتنی تاخیر کرنا کہ فجر کی نماز قضا ہوجائے گناہ کا باعث ہے۔اور روزے کی حالت میں غسل کا وہی طریقہ ہے جو عام حالات میں ہے، البتہ روزہ کی وجہ سے ناک میں اوپر تک پانی ڈالنا اور کلی میں غرارہ کرنا درست نہیں ہے، اس لیے کہ ناک میں پانی چڑھانے سے یا غرارہ کرنے سے پانی حلق میں چلا گیا تو اس سے روزہ فاسد ہوجائے گا، لہذا صرف کلی کرلے اور ناک میں پانی ڈال لے توغسل صحیح ہوجائے گا، افطاری کے بعد غرارہ کرنے یاناک میں پانی چڑھانے کی ضرورت بھی نہیں ہوگی۔

صورت مسئولہ میں جنابت کی حالت سحری کرکے روزہ رکھ لینے سے روزہ ہوجائے گا، البتہ اس کو عادت بنالینا ناپسندیدہ عمل ہے،بہتر افضل یہ ہےکہ انسان پہلےغسل کرلے اس کے بعد سحری کھا کرروزہ رکھ لے۔ 2۔خواب میں احتلام ہوجانے سے روزہ پراثر نہیں پڑتا تو ہمیں اسلام کی باتوں پر عمل کر سکیں تا کہ ہماری جو زندگی ہے وہ آسان ہو سکے اور ہمیں کل کو کسی بھی مسئلے کو لے کر کوئی بھی پریشانی نہ ہو۔ جیسا کہ ہم سب ہی اس بات سے بہت ہی اچھے سے واقف ہیں کہ ہم نے اسلام پر ہی عمل کر کے جیت حاصل کر نی ہے۔

اگر ہم اس طرح نہیں کر یں گےا گر ہم اسلام پر عمل نہیں کر یں گے تو ہماری زندگی جو ہے وہ بے سکون ہو جا ئے گی اور نہ ہی ہماری دنیا رہے گی اور نہ ہی ہماری آخرت رہے گی ہم نہ ادھر کے رہیں گے اور نہ ہی اُدھر کے رہیں گے تو ہمیں چاہیے کہ ہم اپنے دین اسلام پر عمل کر یں اور جو کوئی بھی مسئلہ ہے اس مسئلے کو لے اسلام سے ہی رہنمائی حاصل کر یں تا کہ ہمارے جتنے بھی مسئلے مسائل ہیں ان کا حل نکل سکے آسانی کے ساتھ اور نہایت ہی بہتری کے ساتھ۔ امید ہے آپ کو آج کی باتیں پسند آئی ہوں گی۔

Leave a Comment