ایڑھیوں میں درد ان باتوں پر عمل کرلیں دوبارہ کبھی درد نہیں ہوگا وجوہات،علامات گھریلو علاج

بعض افراد کو جیسے ہی قدم فرش پر رکھیں تو ایڑھیوں شدید درد محسوس ہوتا ہے ۔اگر آپ ایسی کسی علامت کا شکار ہیں تو پلانٹر فیشی آئی ٹس کا شکا ر ہوں کیونہ عام طورپر ایڑھی کا درد اسی وجہ سے ہوتا ہے ۔ پلانٹر فیشیا دراصل چپٹی باختوں کی ایک تہہ ہوتی ہے جو ایڑھی کی ہڈی کو پاؤں کی انگلیوں سے جوڑتی ہے ۔

پٹھوں کے ان ریشوں سے پاؤں کے خمدار محراب کو بھی سہارا لتا ہے ۔ اگر آپ پلانٹر فیشیا پر دباؤ بڑھاتے رہیں تو یہ کمزور ہونے کے ساتھ ساتھ اس میں سوئیلنگ ہونے لگتی ہے ۔ایسی صورت میں کھڑ ے ہونے یا چلنے میں ایڑھی یا تلوے میں شدید درد محسوس ہوتا ہے ۔ ایڑھیوں میں درد اور تکلیف طویل عرصے تک متعلقہ ریشوں پر پڑنے والے دباؤ کی وجہ سے ہوتا ہے ۔ پلانٹر فیشی آئی ٹس کی شکایت ادھیڑ عمر لوگوں میں عام ہوتی ہے۔

لیکن آجکل خواتین اس مسئلے کا شکار زیادہ نظر آتی ہے جو خواتین زیادہ چلنے یا زیادہ دیر کھڑے رہنے کا کام کرتی ہیں اضافی وزن کا شکار ہوں یا حاملہ ہوں و ہ اس مسئلہ سے دوچار ہوسکتی ہیں اضافی وزن اور مسلسل حرکت کے باعث ایڑیوں میں درد ہونے لگتا ہے ۔ یہ تکلیف ایک یا دونوں پاؤں میں ہوسکتی ہے ۔ پلانٹر فیش آئی ٹس کی تکلیف اس وقت ہوتی ہے ۔

جب آپکے پاؤں کی خم دار کمان کو سہارا دینے والی جھلی پر بہت زور پڑنے لگے اگر یہ دباؤ مسلسل جاری رہتا ہے کہ جھلی کی باوتیں ہوتی ہیں وہ کٹنے لگتی ہیں اور پھٹ جاتی ہیں ۔ اسی سے ورم کی شکایت ہونے لگتی ہے ۔ یہ شکایت درج ذیل صورت میں زیادہ ہوسکتی ہے ۔ اگر آپ اس مرض کا شکار ہیں تو مسلسل کسی کام میں اپنے آپ کو تحلیل میں نہ رکھیں ایسے جوتے منتخب کریں جو نرم اور آرام دہ ہوں ۔

ایڑھی کا درد دور کرنے والی ورزشیں ضرور کریں۔آپ پانی کی جمعی ہوئی بوتل لیں یا بول لے لیں آپ نے ایک منٹ کیلئے اپنے پاؤں کو رول کرنا ہے ۔ دوسرے پاؤں پر بھی اسی عمل کو دہرانا ہے ۔ کم از کم ایک منٹ تک دہرانا ہے ۔ اب آپ نے ایک پاؤں کو دوسرے پاؤں پر رکھنا ہے اور آپ نے انگوٹھوں کو اندر کی طرف کھینچنا ہے ۔پھر چھوڑ دینا ہے ۔ تین دفعہ اس عمل کو دہرائیں ۔

اس سے درد میں راحت ملے گی ۔ اسی طرح تمام ایکسرسائز جو ایڑھی کے درد سے نجات پانے کیلئے کرسکتے ہیں ان ایکسرسائز کو کرنے کا معمول بنا لیں۔گھریلو ریمڈی بتاتے ہیں کہ بیکنگ سوڈا بھی ایڑھی کے درد میں کمی لاتا ہے ۔ آدھی چائے کی چمچ بیکنگ سوڈا کو پانی میں ملا کر پیسٹ بنا لیں اور اس پیسٹ کو ایڑھی پر لگائیں اس عمل کو کچھ دن روزانہ دوبار کرنا ہے اس سے آپ کے درد میں آپکو نجات ملے گا۔ کھوپڑے کا تیل ایڑھی کے درد کیلئے مفید ہے ۔

کوشش کریں کہ تیل کا مساج سونے سے پہلے کیا جائے تاکہ صبح ہونے والی تکلیف سے آپ کو نجات مل سکے ۔ السی کے بیج کا تیل بھی ایڑھی کے درد کے لیے فائدہ مند ہے ۔ ایک چوتھائی کپ السی کے بیج کا تیل آپ گرم کرلیں کپڑے کو اس میں بھگو کر ایڑھی پر رکھ لیں ۔اس کے بعد پلاسٹک کی تھیلی باندھ دیں۔اس عمل کو روزانہ ایک مرتبہ ضرور کریں اس وقت تک جب تک آپ کو درد سے نجات نہیں مل جاتی ۔

Leave a Comment