یاداشت کیوں کمزور ہوتی ہے؟

یاداشت کیوں کمزور ہوتی ہے؟ امام علی کی خدمت میں ایک شخص آ کر پوچھنے لگا یا علی! میں باتوں کو بھول جاتا ہوں اور دن بدن میرا دماغ کمزور ہوتا جارہا ہے۔

تو امام علی نے فرمایا : اے بندہ خدا تمہارا چہرہ بتا رہا پے کہ تم گرم گرم کھانا جلدی جلدی کھاتے ہو۔یاد رکھنا جو انسان گرم گرم کھانا جلدی جلدی میں کھاتا ہے اس کا دماغ کمزور اور جسمانی بیماریاں وجود پہ اختیار رکھتی ہیں اور یوں وہ باتوں کو بھولنا شروع ہو جاتا ہے تو وہ پوچھنے لگا یا علی میں کس طرح سے کھانا کھاؤں جس سے میرے دماغ اور جسم کو فائدہ ملے؟

امام علی نے فرمایا کھانا کھانے سے پہلے اللہ کا نام لے کر کھایا کرو ،کھانا بیٹھ کر کھایا کرو ،سیدھے ہاتھ سے کھایا کرو ۔کھانا ٹھنڈا کر کے چھوٹے چھوٹے نوالے توڑ کر منہ میں ڈالا کرو اور خوب چبھایا کرو اور کھانے کے فورا بعد پیٹ بھر کر پانی نا پیا کرو ۔

یاد رکھنا اللہ نے رزق میں شفا،برکت اور رحمت کو پوشیدہ کیا جو انسان صحیح طرح سے کھانا کھاتا ہے اور کھانا کھانے کے بعد اللہ کا شکر کرتا ہے تو وہ کھانا اس کے جسم کے لیے شفا بھی بن جاتا ہے دوا بھی بن جاتا ہے اور برکت اور رحمت بھی بن جاتا ہے